افغانستان کے غیر یقینی حالات پاکستان پر بُری طرح اثر انداز ہیں افغانستان سے ملحق طویل سر حد غیر محفوظ ہے ۔اور یہ صورتحال حال پاکستان کے لیے باعث تشویش ہے ان سرحدوں کی کماحقہ نگرانی و حفاظت یقینی بنائی جاتی ہے تو دہشت گرد عملیات اور ان کے کُل پرزوں پر قابو پایا جا سکتا ہے ۔اس مقصد کے تحت پاک افغان سرحد پر پنجپائی کے مقام پر آہنی باڑ کی تنصیب کا کام...

انتخابات  کی تاریخ جب قریب آتی ہے تو ہر شخص اس سوچ میں غرق ہو جاتا ہے کہ اپنا قیمتی ووٹ کس کو دے؟کس امیدوار کے انتخابی نشان پر اپنی تصدیقی مہر ثبت کریں ؟کس کو راہنما مانے؟اپنی رائے کس کے حق میں استعمال کرے؟عوام پر واضح رہنا چاہیے کہ ووٹ صرف کاغذ کی پرچی نہیں جو بغیر سوچے سمجھے مہر لگا کر کسی کے بھی حق میں ڈال دی جائے بلکہ یہ آپ...

’’پروفیسر محمد رفیع بٹ کی شہادت‘‘کے بعدبھارتی میڈیا نے چپ سادھ لی ہے جبکہ 1990ء سے لیکر 2013ء تک یہ تاثر دیا گیا کہ کشمیر کی جہادی تنظیموں میں شامل نوجوانوں کی اکثریت جاہلوں یا کم لکھے پڑھے لوگوں کی ہے حالانکہ یہ تاثر تب بھی غلط تھا اور یہ بحث آج بھی سرے سے غلط اور بیکار ہے۔ سوشل میڈیا کے ذرائع سے پریشان نئی دہلی کا کورپٹ میڈیا یہ سب چھپانے کی...

آج کل ہر گلی اور گھر میں ایک ہی موضوع پر بحث جاری ہے کہ پروفیسر محمد رفیع بٹ نے اعلیٰ ترین سرکاری نوکری چھوڑ کر انتہائی پر خطر راستہ کیوں اختیار کیا تھا؟کوئی کہتا ہے یہ مایوسی کی علامت ہے کہ ایک پی،ایچ،ڈی اسکالر اچھی نوکری ملنے کے بعد اس کو ٹھوکر مار کر وہ راستہ اختیار کرے جس کے قدم قدم پر موت سایے کی طرح پیچھا کرتی ہے ۔کوئی کہتا ہے کہ...

رئیس المتغزلین میر تقی میر نے کہا تھا: جسے شب آگ سا دیکھاسلگتے اُسے پھر خاک ہی پایا سحر تک نوازشریف کے انجام سے قطع نظر ابھی تو وہ ایک شب طاری کیے اور آگ بنے ہوئے ہیں۔میر کا بیان ہی کیفیت کو سازگار ہے کہ جدھر پھر نظر دیکھوں لگ جائے آگ دم دم کُشی لب پہ کھیلے ہیں ناگ نوازشریف تُل گئے ہیں کہ قومی مفادات کو آگ میں جھونک کر ذاتی مفادات کی ہنڈیا چڑھائیں گے۔ اُنہیں...

گناکی فصل نے بالخصوص سندھ اور جنوبی پنجاب کے کسانوں کے گھروں میں حشر برپا کرڈالا ہے اغلب امکان یہی ہے کہ آئندہ جنوبی پنجاب کے کسان گنا کی فصل کم کم ہی کاشت کریں گے پی ٹی آئی کے سابق جنرل سیکریٹری ترین صاحب نے ہائیکورٹ میں رٹ کرکے شریفوں کے عزیزوں کی شوگر ملز کو بند کرڈالنے کا حکم لے لیا تھا اور یہ بھی کہ انہیں فوراً یہاں سے اکھاڑ لیا...

کسی بھی سیاسی رہنما میں ایک رتبے کا احساس مغربی تصورِ سیاست میں مباح ہے۔ مگر عظمت ایک مختلف چیز ہے۔ نکسن نے کمال کا فقرہ لکھا:عظیم قوموں کی رہنمائی کرنے والے ’’چھوٹے لوگ‘‘ کسی بڑے بحران کے دوران عظمت کی کسوٹی پر اپنے آپ کو واضح طور پر کامیاب ثابت کرنے میں ناکام رہتے ہیں‘‘۔نوازشریف ا س کی بدترین مثال ہے۔ جن کی انانیت پاکستان سے بڑھ چکی ہے۔ وہ کوئی چرچل بھی...

میاں نواز شریف عدالتی فیصلوں سے تاحیات نا اہل ہو چکے اور اعلیٰ عدالت نے پارٹی قیادت سے بھی محروم کرڈالامگر پارٹی انہیں ہی اصلی اور وڈاقائد تسلیم کرتی ہے۔ بقول ان کے ممبران "خلائی مخلوق"کے دبائو سے اڑان بھر کر کسی دوسری منڈیر پر بیٹھتے جارہے ہیں ۔ان کے متعلق بھارتی اخبار نے ایک کالم کے ذریعے الزام عائد کیا ہے کہ انہوں نے تقریباً5؍ارب ڈالرز غیر قانونی طور طریقوں سے یعنی منی...

ریاض احمد چوہدری بھارتی معاشرے میں انتہا پسندی کا رجحان بہت تیزی سے پھیل رہا ہے۔ تاریخ گواہ ہے کہ مسلمان حکمرانوں نے ہمیشہ مقامی آبادی کو اپنے اقتدار میں شریک کیا اور انہیں فوج اور انتظامیہ میں اہم عہدوں پر فائز کیا۔ مگر اس کے جواب میں ہمیشہ نفرت ، غداری اور دھوکہ ہی ملا۔ آج بھی مسلمانوں کو خوف زدہ کرنے والے واقعات کو مختلف مقامات پر دہرا کر یہ ثابت کرنے کی...

میاں نوازشریف پہلیاں ہی سناتے رہتے ہیں کہ بوجھو تو جانیں ان کے اس بیان پرکہ میرا مقابلہ کسی عمران زرداری سے نہیںبلکہ خلائی مخلوق سے ہے میڈیا پر عجیب و غریب بحث چھڑ گئی ہے ٹی وی چینلز پر اینکر حضرات اب مزے لے لے کر اس پربحث و مباحثہ کر رہے ہیں۔ بلاول نے تو یہاں تک کہہ ڈالا کہ اگر میاں صاحب کا مقابلہ بقول ان کے خلائی مخلوق سے ہے...
اشتہارات