صرف ایک دن میں تعمیر ہونےوالاتھری ڈی پرنٹڈ گھر

کیا آپ چاہتے ہیں کہ آپ کا گھر صرف ایک دن میں تعمیر ہوجائے اور اس کی قیمت بھی مناسب ہو؟ اگر جواب ہاں ہے تو جان لیجئے کہ ایسا اب ممکن ہے۔

آج کل جہاں تھری ڈی پرنٹنگ سے جسمانی اعضاء تک بنائے جارہے ہیں، وہیں اب گھر بھی بننے شروع ہو گئے ہیں۔

ذیل میں دکھائی گئی ویڈیو میں موجود گھر تھری ڈی پرنٹنگ کے زریعے صرف ایک دن میں تیار کیا گیا ہے۔ جبکہ اس کی تعمیری لاگت صرف 10134 ڈالرز یعنی تقریباً بارہ لاکھ پاکستانی روپے ہے۔

سستی تعمیرات کی دنیا میں یہ ایک بڑی چھلانگ ہے۔

تھری ڈی پرنٹنگ کمپنی Apis Cor نے یہ گھر ایک موبائل پرنٹر کے زریعے بنایا ہے، جو دنیا کا پہلا تھری ڈی پرنٹڈ گھر ہے۔

کمپنی کا دعویٰ ہے کہ یہ گھر 175 سال تک کھڑا رہ سکتا ہے اور سخت ترین موسم کو بھی جھیل سکتا ہے۔

اس گھر کا اسٹرکچر کنکریٹ سے پرنٹ کیا گیا ہے۔

جبکہ کھڑکیاں، دروازے اور تازہ پینٹ کے بعد اس کا نقشہ ہی بدل جاتا ہے۔
اس گھر میں چار کمرے پانی اور بجلی کی سپلائی کے ساتھ موجود ہیں۔
کمپنی کا کہنا ہے کہ یہ ماڈل سستے اور جلد تعمیر ہونے والے گھروں میں پہلا قدم ہے، جبکہ اسے پوری دنیا میں استعمال کرنے کی امید بھی ظاہر کی ہے۔

Electrolux