ایرانی سپریم لیڈرکی وفات کی خبرشائع کرنے پراخباری ویب سائٹ بلاک

ایران میں ایک مقامی اخبار کی ویب سائٹ کو اس وقت بلاک کردیا جب اس پر سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای کی وفات کی بریکنگ نیوز شائع کی گئی۔عرب ٹی وی کے مطابق فارسی اخبار کی ویب سائٹ پر خامنہ ای کی وفات کی خبر کے پوسٹ ہوتے ہی اسے ٹیلی گرام پر بڑے پیمانے پر شیئر کیا جانے لگا۔ اس خبر میں کہا گیا تھا کہ معدے کے کینسر کے باعث سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای انتقال کرگئے ہیں۔اس خبر میں کہا گیا تھا کہ سپریم لیڈر کی وفات کی خبر سامنے آتے ہی اتوار کے روز نصرت انقلاب کے حوالے سے تمام سرگرمیاں اور تقریبات منسوخ کر دی گئی ہیں۔اخبار قانون کی ویب سائٹ پر پوسٹ کی گئی خبرکی کسی آزاد ذرائع سے تصدیق نہیں ہوسکی۔ اس خبر کے سامنے آنے کے چند منٹ کے بعد ویب سائٹ کو بند کردیا گیا۔بعد ازاں اخبار کی طرف سے’ٹوئٹر‘ پرپوسٹ ایک بیان میں کہا گیا کہ اخبار کی ویب سائٹ کو ہیک کیا گیا ہے۔ اس پرخامنہ ای کی وفات سے متعلق خبر میں کوئی صداقت نہیں۔یہ خبر ہیکروں کی جانب سے پوسٹ کی گئی ہے۔اخبار کے ایڈیٹرعلی رضا شاکر نے بتایا کہا کہ ہمارے اخبار کی ویب سائٹ کو ہیک کیا گیا ہے۔ ایران کی انسداد سائبر جرائم فورس اس کیس کی تحقیقات کررہی ہے۔

Electrolux